یمن مذاکرات دسمبر کے اوائل میں شروع ہوں گے:جیمزمیٹس

رسائی نیوز ویب ڈیسک:امریکی وزیر دفاع جیمزمیٹس نے کہا کہ حوثی باغیوں کے علاوہ منصور ہادی کی حکومت مذاکرات کیلئے تیار ہے۔ گزشتہ مہینے جیمزمیٹس نے یمن میں جنگ بندی کیلئے اپیل کی تھی۔ یمن میں تین سال سے حوثی باغیوں اور حکومت کے درمیان جنگ جاری ہے۔ سعودی اتحادی افواج یمنی حکومت کی مدد کیلئے حوثی باغیوں سے جنگ کررہی ہے۔یمن میں امدادی کاموں میں مصروف اقوام متحدہ کی ذیلی تنظیموں اور دیگر این جی اوز نے بچوں کی ہلاکتوں سے متعلق ہولناک اعداد و شمار جاری کیے ہیں۔ یمن میں گولیوں، بم اور میزائل حملوں میں اتنے بچے نہیں مر رہے ہیں جتنے فاقہ کشی کے باعث جہان فانی سے کوچ کر جاتے ہیں۔جنگ زدہ یمن میں اپریل 2015 سے اکتوبر 2018 کے درمیان 84 ہزار 701 بچے خوراک کی کمی کے باعث انتقال کرگئے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق حدیدہ بندرگاہ کے حصول کیلئے جاری جھڑپوں کے باعث خوراک کی ماہانہ ترسیل میں 55 ہزار میٹرک ٹن کی کمی آئی ہے اور اگر جنگ بندی نہ ہوئی تو تقریباً 14 ملین افراد قحط زدگی کے باعث جان کی بازی ہار جائیں گے-

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں