ہائیکورٹ کاہاتھیوں کےعلاج کیلئےایم سی افسران کوجرمن ڈاکٹرسےرابطہ کرنےکا حکم

چڑیا گھر اور سفاری پارک کے چار ہاتھیوں کی حالت سےمتعلق کیس میں سندھ ہائی کورٹ نے کےایم سی افسران کو جرمن ڈاکٹر سے رابطہ کرکے پیر تک رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔ کراچی چڑیا گھر اور سفاری پارک کے چار ہاتھیوں کی حالت سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔عدالت نے ریمارکس دئیے کہ کیا جرمنی سے ڈاکٹر نے آکرمعائنہ کیا۔ کے ایم سی کے وکیل نے بتایا کہ جرمن ڈاکٹر رابطےمیں ہے،کےایم سی افسران سےمیٹنگ ہوناباقی ہے۔ درخواست گزار کے وکیل نے بتایا کہ کےایم سی کے افسران کی وجہ سے معاملہ رکا ہوا ہے۔عدالت نے کےایم سی وکیل سے استفسار کیا کہ لگتا یہ ہے کہ آپ کے افسران ایسا کرنے سے کترا رہے ہیں اورآپ کےپاس اپنے ڈاکٹر کیوں نہیں ہیں۔

عدالت نے مزید کہا کہ کےایم سی افسران کو کہیں کہ جرمن ڈاکٹر سے رابطہ کریں اور پیر تک پیش رفت کریں اور عدالت کو آگاہ کیا جائے۔عدالت نے کیس کی سماعت 15 نومبر کے لیے ملتوی کردی۔ واضح رہے کہ عدالت نے درخواست گزار کی جرمن ڈاکٹر سے طبی معائنہ کرانے کی درخواست منظور کر رکھی ہے۔عدالت نے ہاتھیوں کی جرمن ڈاکٹر سے طبی معائنے کی اجازت دی تھی ۔50 فیصد اخراجات کے ایم سی، 50 فیصد درخواست گزار کو ادا کرنے کا حکم دیا گیا تھا۔درخواست گزار کے وکیل نے بتایا تھا کہ چاروں ہاتھیوں کی صحت توجہ طلب ہے اورچاہیے ہیں کہ جرمن ڈاکٹر سے طبی معائنہ کرایا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں