وفاق کو بلوچستان کے مسائل کا مکمل ادراک ہے ، جلد حل کیلئے کوشش کریں گے ، صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی

کوئٹہ۔: صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہاہے کہ بلوچستان اسٹرٹیجک اعتبارسے بڑی اہمیت کاحامل صوبہ ہے ، صوبے میں سیاحت کے وسیع امکانات ہیں اس لیے گلگت بلتستان کی طرز پر بلوچستان میں بھی سیاحت کو فروغ دینا ہوگا،کوروناوائرس کی وبا کا قوم نے مل کر مقابلہ کیا کیونکہ کوروناوائرس بڑی آزمائش تھی جس میں خدا نے ہمیں کامیابی دی،وزیراعظم عمران خان دنیا کے واحد لیڈر ہیں جنہوں نے عام آدمی کو تکالیف کا احساس کرتے ہوئے پاکستان میں مکمل لاک ڈاون نہیں لگایا۔وفاق کو بلوچستان کے مسائل کا ادراک ہے جسے جلد حل کیلئے کوشش کریں گے۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے پیرکوگورنر ہاوس کوئٹہ میں قبائلی عمائدین ،تاجرنمائندوں ودیگرطبقات سے تعلق رکھنے والے افراد سے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر گورنربلوچستان سید ظہوراحمد آغا،صوبائی وزراءسردارصالح بھوتانی ،محمدخان لہڑی ،مبین خان خلجی ،ظہوراحمد بلیدی،صوبائی محتسب نذرمحمد بلوچ ،ایم ڈی بلوچستان ایجوکیشن فاونڈیشن پروفیسرشیر زمان ودیگربھی موجودتھے ۔

صدر مملکت ڈاکٹرعارف علوی نے کہاکہ بات چیت اور مذاکرات کے ذریعے ہی عوامی مسائل کابہترحل تلاش کیاجاسکتاہے آج کی نشست اسی سلسلے کی ایک کھڑی ہے ۔ وقت دینے اور گورنرہاوس آمد پر قبائلی عمائدین کاشکر گزار ہوں۔عام آدمی کے مسائل کا ادراک حکومت کا فرض ہے۔ درآمدات اور برآمدات میں توازن لانا ہوگا حکومت برآمدات بڑھانے پر توجہ دے رہی ہے۔

صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہاکہ عمران خان دنیا کے واحد وزیر اعظم ہیں جنہوں نے کووڈ میں مکمل لاک ڈاون کی مخالفت کی۔صدر ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ بلوچستان وسائل سے مالا مال ہے۔بلوچستان میں سیاحت کے وسیع امکانات ہیں اس لیے ہمیں گلگت بلتستان کی طرز پر بلوچستان میں سیاحت کو فروغ دینا ہوگا۔ انہوں نے کہاکہ کامیاب جوان پروگرام کے تحت 20 ارب روپے کے آسان قرضہ دئیے گئے۔ پانی کی ضرورت پورا کرنے کیلئے ری سائیکلنگ کی ضرورت ہے۔ ہمیں پانی کی ضروریات کو پورا کرنے کیلئے روایتی طریقوں سےہٹ کر کام کرنا ہوگا۔ انہو ں نے کہاکہ سوئی گیس سے پورے ملک نے استفادہ کیالیکن بلوچستان زیادہ فائدہ نا اٹھا سکاہمیں بیماریوں سے بچائو کے جدید طریقے اپنانے ہوں گے ۔

صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہاکہ حکومت زرعی شعبے میں بڑی سبسڈیز دیتی ہے ۔وفاق کوبلوچستان کے مسائل کا مکمل ادراک ہے جلد حل کرنے کیلئے کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ سیکورٹی ہوتی ہے تب ہی سرمایہ کاری آتی ہے ۔انہوں نے کہاکہ وسائل کو موثر طریقے سے بروئے کار لانا ناگزیرہے۔نوجوانوں کی نوکریوں کیلئے کامیابی جواں سکیم بہترپروگرام ہے جس سے استفادہ کی ضرورت ہے ۔

صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہاکہ پچھلے سال کامیاب جوان پروگرام کے ذریعے 20 ارب روپے کے چھوٹے قرضے فراہم کئے گئے ۔بلوچستان کے بارڈرز پر قانونی تجارت میں آسانیاں پیداکرنے اورتاجروں کے تجاویز سے متعلق وزرات تجارت اوردیگرمتعلقہ حکام کے ساتھ معاملہ رکھوں گا۔بلوچستان میں سیاحت کے شعبے میں سرمایہ کاری اورروزگارکے بڑے مواقع موجودہیں جس سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے ۔

بعد ازاں قبائلی عمائدین کی طرف سے صدر مملکت کو بلوچستان کی روایتی دستار پہنائی گئی ۔ قبائلی عمائدین اور تاجروں نے صدر مملکت کو صوبے کے مسائل سے آگاہ کیا ۔صدرمملکت ڈاکٹرعارف علوی نے قبائلی عمائدین ،کوئٹہ چیمبر آف کامرس کے نمائندوں ،سول سوسائٹی کے مسائل توجہ سے سنے اورانہیں حل کرنے کی یقین دہانی کروائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں