وفاقی حکومت کو چاہیے کہ مسائل پر توجہ دیں : مراد علی شاہ

رسائی نیوزنمائندہ خصوصی حیدرآباد:حیدرآباد میں میڈیا سے گفتگو میں وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ صوبوں کو پیسے نہیں مل رہے، پنجاب کے اندر 87 ارب خرچ ہوئے جب کہ پچھلے سال 287 ارب خرچ ہوئے، سندھ کو بھی پیسے نہیں مل رہے، کراچی میں نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف چائلڈ ہیلتھ نے کبھی ہم سے پیسے نہیں مانگے لیکن ہمیں مدد کو کہا کیونکہ ڈالر کی قیمت زیادہ ہے اور تاجر برادری نے ڈونیشن کم کر دیا ہے، وفاقی حکومت کو چاہیے کہ پہلے اپنا کام کرے اور مسائل پر توجہ دیں جس میں وہ بری طرح فیل ہو چکے ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ نیاز اسٹیڈیم میں پی ایس ایل کا میچ کروانے کا کہا تھا تاہم نہیں کروا سکا، پی سی بی نے کمٹمنٹ کی ہے، امید ہے کہ اگلے سال نیاز اسٹیڈیم میں میچ کروائیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ آغا سراج درانی کے گھر پر ریڈ کے دوران خواتین کو 8 گھنٹے محصور کیا گیا، چیئرمین نیب سے بات ہوئی ہے وہ اپنی سربراہی میں اس کی انکوائری کریں گے۔ مراد علی شاہ نے کہا کہ اسد عمر کی گالیوں سے ان کا قد کاٹھ نہیں بڑھے گا، وزیراعظم عمران خان تھر جا رہے ہیں، دیکھتے ہیں وہ کیا کرتے ہیں تاہم مجھے تھرپارکر نہیں بلایا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں