وزیراعظم عمران خان نے امریکی صدر کو آئینہ دکھا دیا

رسائی نیوز نمائندہ خصوصی اسلام آباد: امریکی صدر کی تنقید کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ صدر ٹرمپ کو پاکستان سے متعلق ریکارڈ درست کرنے کی ضرورت ہے۔پاکستان نے 75 ہزار جانیں قربان کیں، 123 ارب ڈالر کا نقصان اٹھایا، 20 ارب ڈالر کی امداد نقصان کے مقابلے میں کچھ نہیں، پاکستان کو قربانی کا بکرا بنانے کے بجائے اپنی ناکامیوں کا جائزہ لیں- نائن الیون سانحہ میں کوئی پاکستانی ملوث نہیں تھا لیکن اس کے باوجود پاکستان نے دہشتگردی کیخلاف جنگ میں شامل ہونے کا فیصلہ کیا۔ دہشتگردی کے خلاف جنگ نے عام پاکستانی کی زندگی کو بری طرح متاثر کیا، دہشتگردی کیخلاف جنگ کی وجہ سے ہمارے قبائلی علاقے تباہ ہو گئے اور لاکھوں لوگوں کو اپنے گھروں سے محروم ہونا پڑا، اس کے علاوہ امریکا کو پاکستان آج بھی زمینی و فضائی راستے کی سہولت مفت دے رہا ہے، صدر ٹرمپ بتا سکتے ہیں کہ کسی دوسرے اتحادی نے اتنی قربانی دی –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں