لورالائی میں ڈی آئی جی آفس پر دستی بم حملے اور فائرنگ کے نتیجے میں 2 پولیس اہلکار شہید اور 20 افراد زخمی ہوگئے

رسائی نیوز لورالائی: لوچستان ایک مرتبہ پھر دہشتگردوں کے نشانے پر، بھاری اسلحے اور دستی بموں سے لیس شدت پسندوں نے ڈی آئی جی آفس لورالائی پر ہلہ بول دیا۔ دہشت گردوں نے پہلے اندھا دھند فائرنگ کی اور پھر دستی بم پھینکے جس سے 14 افراد زخمی ہو گئے جن میں 4 پولیس اہلکار بھی شامل ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ پہلے شدید فائرنگ کی آوازیں سنائی دیں جس کے بعد کان پھاڑ دینے والے دھماکے سے فضا گونج اٹھی۔اطلاعات کے مطابق ڈی آئی جی آفس میں کانسٹیبلز اور کلرکوں کی اسامیوں کے انٹرویوز جاری تھے اور امیداواران کی بڑی تعداد احاطے میں موجود تھی۔ حملے کے باعث بھگدڑ مچ گئی تاہم سکیورٹی فورسز اور پولیس کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی جنہوں نے زخمی افراد کو ہسپتال منتقل کیا اور جائے وقوعہ کو گھیرے میں لے کر دہشتگردوں کی تلاش شروع کر دی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں