علامہ اقبال ؒ نے خطبہ آلہ آباد میں تصورِ پاکستان پیش کر کے برصغیر کے مسلمانوں کی مشترکہ منزل کی نشاندہی کی ، چیئرمین سینیٹ

اسلام آباد۔: چیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی نے کہا ہے کہ ہمیں عظیم مفکر علامہ اقبالؒ کی سوچ اور فکر کو اُجاگر کرنا چاہیے اور ان کی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے وطن عزیز کو فرقہ پرستی، انتہا پسندی، دہشت گردی جیسی برائیوں سے پاک کر کے حقیقی معنوں میں اسلامی فلاحی ریاست کے طور پر ترقی دیں اور اقوام عالم میں باعزت مقام پر فیض حاصل کریں۔ یہ بات انہوں نے شاعر مشرق علامہ اقبال کے یوم ولادت کے موقع پر جاری اپنے پیغام میں کہی۔ انہوں نے کہا کہ تمام اہل وطن اور ملت اسلامیہ مفکر اسلام وشاعر مشرق ڈاکٹر علامہ محمد اقبالؒ کے144 ویں یوم ولادت کے موقع پر بھرپور انداز میں خراج عقیدت پیش کر رہی ہے۔ڈاکٹر علامہ محمد اقبال ؒبرصغیر پاک و ہند کے عظیم مدبر و رہنما تھے اور ان کی خدمات کو نہ صر ف یاد رکھا جائے گا بلکہ پوری قوم احسان مند بھی رہے گی۔

چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ علامہ محمد اقبال ؒ نے خطبہ آلہ آباد میں تصورِ پاکستان پیش کر کے برصغیر کے مسلمانوں میں آزادی حاصل کرنے کی نئی روح پھونک دی جس سے ان کی مشترکہ منزل کی نشاندہی ہوئی۔علامہ اقبالؒ نے اپنی قائدانہ صلاحیتوں کی بدولت برصغیر کے مسلمانوں کو آزادی کے حصول کیلئے عملی جدوجہد پر آمادہ کیا اور یہ اُسی جدوجہد کا صلہ ہے کہ آج ہم ایک آزاد اور جمہوری وطن میں اپنی زندگی بسر کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ علامہ محمد اقبال ؒ نے برصغیر کی ان جلیل القدر ہستیوں میں شامل ہیں جنہوں نے اس خطے کے مسلمانوں کو غلامی کی زنجیروں سے نجات دلانے کیلئے جداگانہ قومیت کا احساس اُجاگر کیا۔وہ برصغیر کے مسلمانوں کے مسلمہ لیڈر تھے جنہوں نے قومی و ملی شاعری کے ذریعے مسلمانوں کے جذبات کو متحرک رکھا۔

قائداعظم محمد علی جناحؒ خود علامہ محمد اقبالؒ کی قائدانہ صلاحتیوں کے معترف تھے۔ چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے کہا کہ علامہ اقبالؒ نے ہمیشہ اتحاد و اتفاق کی تلقین کی انہوں نے برصغیر کے مسلمانوں کو اپنی شاعری کے ذریعے ایسے وقت میں راستہ دکھایا جب وہ غلامی کے اندھیروں میں اپنی منزل کا سراغ کھو چکے تھے۔

انہوں نے فکرو افکار کا وہ چراغ روشن کیا جس کی برصغیر کے مسلمان کئی صدیوں سے تلاش میں تھے۔ علامہ اقبالؒ کی فکر سے وابستگی کا یہ تقاضا ہے کہ ہم ان کی سوچ کو ناصرف سمجھیں بلکہ اس پر عمل پیرا ہو کر پاکستان کو حقیقی معنوں میں وہ ریاست بنائیں جس کا تصور علامہ اقبالؒ نے پیش کیا تھا اور اس کو عملی جامہ قائد اعظم محمد علی جناح ؒ نے پہنایا۔

انہوں نے کہا کہ آج کے دن کی اہمیت کے پیشِ نظر ہمیں عظیم مفکر کی سوچ اور فکر کو اُجاگر کرنا چاہیے اور علامہ اقبالؒ کی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے وطن عزیز کو فرقہ پرستی، انتہا پسندی، دہشت گردی جیسی برائیوں سے پاک کر کے حقیقی معنوں میں اسلامی فلاحی ریاست کے طور پر ترقی دیں اور اقوام عالم میں باعزت مقام پر فیض حاصل کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں