شاہ رخ کے بیٹے کو مسلمان ہونے پر نشانہ بنایا جارہا ہے، محبوبہ مفتی

ممبئی: سابق وزیراعلیٰ مقبوضہ کشمیر محبوبہ مفتی کا کہنا ہے کہ شاہ رخ خان کے بیٹے کو مسلمان ہونے پر نشانہ بنایا جارہا ہے۔منشیات کیس میں گرفتار شاہ رخ خان کے بیٹے آریان خان کی ممبئی ہائی کورٹ نے درخواست ضمانت مسترد کردی تاہم اب کیس کی سماعت بدھ کو ہوگی۔ بیٹے کی گرفتاری نے جہاں شاہ رخ خان کو پریشان کردیا ہے وہیں بی جے پی کی جانب سے مسلسل مسلمان ہونے پر شاہ رخ خان کو نشانہ بنایا جارہا ہے جب کہ بھارت میں ’شاہ رخ غدار‘ کا ہیش ٹیگ بھی ٹرینڈ کررہا تھا۔ چند روز قبل بھی ایک رپورٹ سامنے آئی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ شاہ رخ خان کے بیٹے کو صرف مسلمان ہونے پر نشانہ بنایا گیا ہے تاہم اب سابق وزیراعلیٰ کشمیر محبوبہ مفتی بھی شاہ رخ خان کے حق میں بول پڑی ہیں۔

سابق وزیراعلیٰ مقبوضہ کشمیر محبوبہ مفتی نے ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ حکومتی ایجنسیاں بی جے پی وزیر کے بیٹے کو 4 کسانوں کے قتل کے جرم کی سزا دیکر مثال بنانے کے بجائے ایک 23 سالہ لڑکے کے پیچھے پڑی ہیں کیوں کہ اس کے نام میں ’خان‘ آتا ہے، یہ انصاف کے ساتھ مذاق ہے کہ بی جے پی ووٹ بینک کے لیے مسلمانوں کو نشانہ بنارہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں