جافزا دستاویزات قانونی شہادت کے مطابق تصدیق شدہ نہیں: خواجہ حارث

رسائی نیوز نمائندہ خصوصی اسلام آباد: اسلام آباد کی احتساب عدالت میں فلیگ شپ ریفرنس کی سماعت ہوئی تو نواز شریف عدالت کے روبرو پیش ہوئے اور ان کے وکیل خواجہ حارث نے حتمی دلائل جاری رکھے۔ انہوں نے جبل علی فری زون اتھارٹی سے متعلق نیب کی دستاویزات پر جواب جمع کراتے ہوئے کہا کہ جافزا دستاویزات قانونی شہادت کے مطابق تصدیق شدہ نہیں، دیکھنا ہو گا کیا ان دستاویزات کو شواہد کے طور پر لیا بھی جا سکتا ہے۔خواجہ حارث کا کہنا تھا کہ قانون کے مطابق بیرون ملک سے آنے والی دستاویزات یا تو اصل ہوگی یا پھر قانون کے مطابق تصدیق شدہ ہوگی، جس ملک سے دستاویزات آئے گی اس ملک کی تصدیق بھی لازم ہے کہ یہ اصل کاپی ہے یا کیا ہے، اس دستاویز کی پھر پاکستانی اتھارٹی بھی تصدیق کرے گی کہ یہ متعلقہ حکام سے بھی موصول ہوئی ہے، پاکستانی قونصل خانہ یا ڈپلومیٹک ایجنٹس اس بات کی تصدیق کرے گا، اگر یہ طریقہ کار اختیار نہیں کیا گیا تو پھر وہ دستاویز ثابت نہیں ہوگی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں