بھارتی ریاستی دہشتگردی: 300 کشمیری گرفتار، بدترین تشدد

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ریاستی دہشتگردی جاری ہے، بھارتی پولیس نے 2 روز کے دوران 300 کشمیریوں کو گرفتار کر لیا جنہیں مختلف تھانوں میں بد ترین تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق کشمیری نوجوانوں کو سرینگر، شوپیاں، بڈگام، گاندر بل، پلوامہ، اسلام آباد، کولگام، بارہ مولہ اور دیگر علاقوں سے گرفتار کیا گیا۔ بھارتی پولیس بزرگ خواتین اور مردوں کو بھی پوچھ گچھ کیلئے تھانوں میں طلب کر کے ہراساں کر رہی ہے۔

بھارتی فورسز نے 5 اگست 2019ء کے بعد مقبوضہ کشمیر میں جبر و استبداد کی کارروائیاں تیز کر دی ہیں اور ہر طرف خوف و دہشت کا ماحول قائم کر رکھا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں