بلوچستان میں امن جلد آنے والا ہے : لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ

رسائی نیوز نمائندہ خصوصی بلوچستان:فرنٹٰئرکور بلوچستان ہیڈ کوارٹر کوئٹہ میں آپریشنل ایکسیلینس ایوارڈ کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ آج کی تقریب سے اندازہ ہو رہا ہے کہ کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کس اتحاد سے لڑی ، پوری قوم اپنی فورسز کےشانہ بشانہ کھڑی رہی ہے، خاص طور پر ایف سی کا پروفشنلزم قابل دیدہے ، پہاڑوں ، سرحدوں پر جہاں کوئی نہیں پہنچ سکتا وہاں ہم نے سینہ سپر ہو کر خطرات اور حملوں کا مقابلہ کیا۔ کمانڈر سدرن کمانڈ نے کہا کہ فوج ایف سی پولیس عوام کی حفاظت کے لئے ہے، لوگ گواہ ہیں کہ کوئٹہ کے حالات بہت خراب اور یہاں سے باہر نکلنا انتہائی مشکل ہو چکا تھا ، لیکن اب یہاں امن آچکا اور ترقی کا عمل جاری ہے پہاڑوں پر جانے والے بہت سے فراری رابطے میں وہ لوگ اپنے اقدام پر شرمندہ ہیں اور واپس آکر پر امن زندگی گزارنا چاہتے ہیں ۔ یفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ صوبائی حکومت اور فوج بلوچستان کی پسماندگی ختم کرنے کے لئے کوشاں ہے، امن اور ترقی کو ساتھ لیکر چلیں گے، ضروری نہیں کہ ترقی کے لئے سو فیصد امن ہی ضروری ہے ، صوبے کی کوسٹ ، گیس ، اور معدنی شعبوں کی ترقی کے لئے اقدامات جاری ہیں ، فوج صوبائی حکومت کی ہر طرح سے مدد کے لئے تیار ہے۔ کمانڈر سدرن کمانڈ نے مزید کہا کہ ایگل فورس کا قیام بلوچستان میں امن کی طرف اہم پیش رفت ہے، بلوچستان پولیس اپنے پیروں پر کھڑی ہو چکی ہے،فوج پولیس میں اصلاحات کے لئے بھی ہر طرح کی مدد کرے گی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے کہا کہ نامساعد حالات میں پاکستان کا دفاع کرنے والے سپوتوں کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں، فخر ہے کہ پاک فوج سمیت تمام فورسز شاطر دشمن کا مقابلہ کر رہی ہیں، ہم ایک ہو جائیں تو انشاء اللہ یہ ملک ہمیشہ قائم رہے گا قاسم سوری نے مزید کہا کہ پاکستان ہمیشہ قائم اور اس کا سبز ہلالی پرچم ہمیشہ لہراتا رہے گا،ہم یہاں امن اور انصاف لائیں گے ۔ تقریب میں ملک کے لئے نمایاں خدمات سر انجام دینے والے پاک فوج ، ایف سی ، بلوچستان پولیس ، شہداء کے لواحقین ، سیاسی شخصیات، دانشوروں ، قبائلی عمائدین ، کھلاڑیوں اور صحافیوں کو آپریشنل ایکسیلنس ایوارڈ سے نوازا گیا –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں