آزاد کشمیر سمیت دنیا بھر میں مقیم کشمیر ی بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے یکطرفہ اقدام کے خلاف ”یوم استحصال کشمیر” منائیں گے

اسلام آباد۔: آزاد کشمیر سمیت دنیا بھر میں رہنے والے کشمیری بھارت کی جانب سے بھارت غیر قانونی زیر قبضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے 5اگست 2019کو اٹھائے گئے یکطرفہ اقدام کے خلاف ”یوم استحصال کشمیر” منائیں گے ،صبح 9بجے ایک منٹ کے لئے ٹریفک روک دی جائے گی جبکہ ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی جائے گی، ”یوم استحصال کشمیر” کے موقع پر صدر ، وزیراعظم سمیت اہم شخصیات کے خصوصی پیغامات جاری کئے جائیں گے ، پرنٹ اور الیکٹرانک میڈیا پر اس دن کی مناسبت سے خصوصی اشاعت و نشریات کا اہتمام کیا جائے گا۔

کل جماعتی حریت کانفرنس کے زیر اہتمام بھارتی ہائی کمشن کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا جس میں 5اگست 2019کو کشمیری عوام کے حقوق پر شب خون مارنے کے بھارتی غیر قانونی اور غیر آئینی اقدامات کے خلاف آواز اٹھائی جائے گی ، مختلف سیاسی جماعتوں اور سول سوسائٹی کے زیر اہتمام اس دن کی مناسبت سے احتجاجی پروگرام کا انعقاد کیا جارہاہے ۔

واضح رہے کہ 5اگست 2019کو بھارت نے آئین کے آرٹیکل 270اور 35اے کا خاتمہ کر کے یکطرفہ طور پر اپنے زیر قبضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کر دی تھی جس پر وزیراعظم عمران خان نے دنیا بھر میں کشمیریوں کا سفیر بن کر ان کا مقدمہ پیش کیا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں